پومپیو کی طرف سے خامنئی پر جھوٹ بولنے اور ماہان ایئرلائن پر وائرس پھیلانے کا الزام

پومپیو کی طرف سے خامنئی پر جھوٹ بولنے اور ماہان ایئرلائن پر وائرس پھیلانے کا الزام

پیر, 23 March, 2020 - 18:45
گزشتہ روز تہران میں وزارت داخلہ کے فیصلے کے تحت ایرانیوں کو ایک سنیما اور بند تجارتی اسٹور کے سامنے دیکھا جا سکتا ہے (نائٹ)
واشنگٹن: ایلی يوسف لندن: «الشرق الاوسط»
گزشتہ روز امریکی وزیر خارجہ مائک پومپیو نے واشنگٹن کی طرف سے ایران کی کسی بھی قسم کی امداد دینے سے انکار کے بعد ایرانی رہنما علی خامنئی پر "کوویڈ 19" کی وبا کے بارے میں جھوٹ بولنے اور ایرانی عوام کی حفاظت پر سیاسی نظریہ کو فوقیت دینے کا الزام عائد کیا ہے۔ یہ بیان یہ ایک ایسے وقت میں آیا ہے جب ایرانی صدر حسن روحانی نے مطالبہ کیا ہے کہ اگر امریکہ ایران کو اس وبا کو روکنے میں مدد کرنا چاہتا ہے تو اسے پابندیاں ختم کرنی چاہئے۔
پومپیو نے ایک بیان میں کہا کہ کورونا کے بارے میں ایسا جھوٹ تشویش ناک ہے جو ایرانیوں اور دنیا بھر کے لوگوں کے لئے مزید خطرہ پیدا کر سکتا ہے اور پومپیو نے ایران کی ماہان ایئرلائن پر الزام لگانے سے بھی پرہیز نہیں کیا اور اسے سب سے بڑی ایرانی دہشت گرد ایئرلائن قرار دیا ہے کیونکہ یہی ایئرلائن چین میں اپنی کم سے کم 55 پروازوں کے ذریعہ "ووہان وائرس" کو منتقل کرنے کا سبب بنی ہے اور انہوں نے مزید کہا کہ موجودہ ایرانی حکومت ہلاکتوں کی تعداد کے بارے میں ایرانی عوام اور باقی دنیا سے جھوٹ بولتی آرہی ہے کیونکہ بدقسمتی سے مرنے والوں کی اصل تعداد مبینہ تعداد سے کہیں زیادہ ہے۔(۔۔۔)
منگل 29 رجب المرجب 1441 ہجرى - 24 مارچ 2020ء شماره نمبر [15092]

Related News



انتخاباتِ مدير

ملٹی میڈیا