"کورونا" کے پھیلاؤ کو روکنے کے لئے پورا عرب متحرک

"کورونا" کے پھیلاؤ کو روکنے کے لئے پورا عرب متحرک

اتوار, 22 March, 2020 - 14:30
گزشتہ روز کرفیو کے آغاز کے ساتھ ہی اردن کی فوج کے جوانوں کو عمان میں گزرگاہوں سے خالی ایک راستہ میں منتشر دیکھا جا سکتا ہے (رائٹرز)
عواصم: «الشرق الاوسط»
اس کورونا وائرس (کوویڈ 19) سے بچنے کے اقدامات کی تعمیل میں عالمی سطح پر گھریلو قرنطینہ میں پھنسے افراد کی تعداد ایک ارب ہوگئی ہے جس نے 164 ممالک کو نشانہ بنایا ہے 11 ہزار  400 افراد کو اغوا کیا ہے جبکہ 271 ہزار 660 افراد کو متاثر کیا ہے اور عرب ممالک نے مکمل طور پر متحرک ہونے کا اعلان کیا ہے اور مساجد اور گرجا گھروں کو بند کرنے کے لئے اپنے سینئر اسکالرز سے فتوے جار کرنے کے سلسلہ میں مدد لیا ہے اور کچھ ممالک نے تو کرفیو کو نافذ کرنے اور خلاف ورزی کرنے والوں کو انصاف کے کٹہرے میں لانے کے لئے اپنی فوجوں کو استعمال کرنے کا سہارا لیا ہے اور خاص طور پر جب متاثر ہونے والوں کی تعداد میں اضافہ ہوا  ہے اور صحت یاب ہونے والوں کی تعداد کم ہے۔
گزشتہ گھنٹوں کے دوران خلیجی ممالک میں اس وائرس کی پیش رفت بہت زیادہ دیکھنے کو ملی ہے کیونکہ احتیاطی تدابیر کے اختیار کرنے کے دوران 100 نئے معاملے اور دو اموات کے کیس سامنے آئے ہیں جبکہ 46 صحت یاب ہوئے ہیں اور سعودی کونسل کے سینئر اسکالرز نے تصدیق کی ہے کہ ان ہدایات پر عمل کرنا ایک شرعی فریضہ ہے اور اس کی خلاف ورزی کرنے والا گناہ گار ہوگا اور کل رات کویت کے وزرا کونسل نے اس وائرس کے پھیلاؤ کو محدود کرنے کے اقدام کے تحت شام پانچ بجے سے صبح چار بجے تک ملک میں جزوی کرفیو کا اعلان کیا ہے۔(۔۔۔)
اتوار 27 رجب المرجب 1441 ہجرى - 22 مارچ 2020ء شماره نمبر [15090]

انتخاباتِ مدير

ملٹی میڈیا